پاکستان کا گنا کسان

تحریر: یمین الاسلام زبیری

پاکستان کے اور کسانوں کی طرح گنا کسان بھی مجبور و بے بس ہے۔ شکر کے کارخانے جو گنے کے خریدار ہیں وہ اس شعبہ میں اپنی اجارہ داری رکھتے ہیں، کیونکہ وہ نوازشریف اور زرداری کے ہیں۔ یعنی ان لوگوں کے جو ہر بار حکومت میں رہتے رہے ہیں۔ یہ نئے کارکانے نہیں لگنے دیتے تاکہ اجارہ قائم رہے۔ میں نے آج (جون ۲۰۱۸)  تک کا جو حال ہے نظم کیا ہے؛ اب عمران خان حکومت بنا رہے ہیں دیکھیں کیا تبدیلی آتی ہے۔

 

اے کساں دشمن حکومت جہل کی زندہ مثال

تو رہے تو کیوں رہے؟ جائز ہے یہ بالکل سوال

ساتھ مل اشراف کے یہ کھیل ہاں کھیلا ہے خوب

تو نے غلہ پیدا کرنے والوں کو  لوٹا ہے خوب

آج  اک افتاد  ہے گنا کسانوں پر  سوار

ان کو نیچا رکھنے کی کوشش ہوئی کتنی ہزار

اور شکر کے کارخانوں کی ہے تو دلّا ضرور

اور ہاں! دلّا کرے کیا، بس کرے گھپلا ضرور

کیوں شکر کے کارخانے اب  ہیں لگنا  آج بند؟

تا اجارہ دار کا غرہ رہے ہردم بلند!!

ساری ترکیبیں کریں، گنے کا گرپائے گا نرخ

مِل اگر گنا نہ لیں ٹھیلوں پہ سڑ جائے گا نرخ

اور پیسہ مالکوں  کا، جبکہ سڑ جائے گا نرخ

اور کساں! بچوں کو دیکھیں، جب نہ بڑھ پائے گا نرخ

ملک سے  پہنچے گا  باہر، مِل جو لے پائے گا نرخ

اور کساں کو منہ چڑا کے بھی تو دکھلائے گا نرخ

گر کساں کو ملتا پیسہ ملک میں کرتا وہ صرف

سب ہی لوگوں  میں  وہ بٹتا  ملک میں ہوتا  جو صرف

ملک میں ہوتا جو خرچہ اس سے بڑھتا روزگار

تجھ کو گالی اب نہ دے کیوں وہ جو ہے بیروزگار

گر کساں سے یہ کہیں تم  ووٹ مت دینا جناب

  وہ پلٹ کر یہ کہے، ’اب کیا میں دوں اس کا جواب۔‘

’ہم کہاں عمال سے لڑتے پھریں گے پر جناب

ووٹ نہ دیں تو خبر تھانے میں لے افسر جناب

سچ میں آزادی نہ ہم کو راس آئی ہے جناب

اپنے لوگوں سے تو اچھے تھے بہت گورے جناب

 انکا یہ معلوم تھا، ہاں وہ لٹیرے ہیں جناب

یہ پتا ہم کو نہ تھا یہ تو لٹیرے ہیں جناب

پیسہ لے کے وہ بھی  اپنے ملک کو پہنچے جناب

پیسہ لے کے یہ بھی اُن کے ملک کو پہنچے جناب‘

کیا یونہی چلتا رہے گا ظلم کا اندھا نظام

ختم ہوگا بھی یمین آخر  کو یہ گندا  نظام

Yemeen Zuberi

Yemeen ul Islam Zuberi is an ex-journalist from Pakistan. He writes in Urdu and rarely in English. Besides essays, he also writes poetry. In Pakistan, he worked for different newspapers for 20 years. Now lives in the US.

yemeen has 7 posts and counting.See all posts by yemeen

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *